39

داعش کے جنگجو اب افغانستان کا رخ کررہے ہیں: روس کا انتباہ

ماسکو: روس نے خبردار کیا ہے کہ عراق اور شام میں شکست کے بعد داعش کے جنگجو اب افغانستان کا رخ کررہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق اس سے قبل بھی عالمی رہنماؤں نے خبردار کیا تھا کہ داعش شام میں بری طرح شکست کھا چکی ہے، جس کے بعد ان کا ٹھکانہ افغانستان ہوگا۔

غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق روسی خفیہ ایجنسی ایف ایس بی کے سربراہ الیگزانڈر بورٹنیکوف نے خبردار کیا ہے کہ افغانستان کے شمالی سرحدی علاقوں میں داعش کے جنگجو نے جمع ہونا شروع کر دیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ پانچ ہزار کے قریب شدت پسند وسطی ایشیائی ممالک کی سرحدوں پر مختلف گروپوں کی صورت میں جمع ہو چکے ہیں۔

روسی حکام نے اسی تناظر میں وسطی ایشیائی ریاستوں کے ساتھ سرحدی نگرانی کو سخت کردیا ہے، سیکیوٹی فورسز سرحدوں پر خصوصی نگرانی کررہے ہیں۔

برطانوی وزیر دفاع ’گیون ویلیمسن‘ نے ایک انٹرویو میں گزشتہ سال ستمبر میں کہا تھا کہ داعش کی سرگرمیاں افغانستان میں بڑھ رہی ہیں اور وہ پھر سے افغانستان میں حملے کر سکتے ہیں۔

بعد ازاں رواں ماہ کے آغاز میں امریکا نے دعویٰ کیا تھا کہ شام اور عراق میں شکست کھانے کے بعد عالمی عسکریت پسند تنظیم داعش اب افغانستان کا رخ کررہی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں